سیاسی میدان میں پلیٹ لیٹس کی کمی یا زیادتی کا کردار

0
155
red platelets cells

پلیٹ لیٹس کا نواز شریف کی صحت میں کردار

https://www.7knows.com/article/851

پلیٹ لیٹس بہت چھوٹے اور باریک خون کے خلیا ت ہیں لیکن بہت اہمیت کے حامل ہیں ان کا کردار  ہمارے جسم سے زخم یا خراش آنے کی صورت میں بہنے والے خون کو   لوتھڑا بن کے روکنا ہے  ۔اگر کسی بیماری سے ایک شریان پھٹ جائے تو پلیٹ لیس سیل کو سنگنل چلے جاتے ہیں اور یہ   فوری وہاں  پہنچ کر ایک پلگ  کا کام کرتے ہیں اور ہوئے نقصان کی بحالی  ؒ(ریکور) کرتے ہیں

اس پراسیس کو ایڈہیشن کہا جاتا ہے کیونکہ یہ موقع پر بہنچ کر جم جااتے ہیں اور ایک بلاکیچ پیدا کر کے خون روکنے میں معاونت کرتے ہیں اور اس موقع پر دوسرے پلیٹ لیٹس سیلز کو کیمیکل سنگلنز بھیج کر بلاتے ہیں ۔

پلیٹ لیٹس  ہڈی کے گودے میں سرخ اور سفید خلیوں کے ساتھ موجود ہوتے ہیں  ایک بار جب پلیٹ لیٹس بن جائیں تو یہ خون میں 8 سے 10 تک دن تک شامل رہتے ہیں ۔مائیکرو سکوپ سے دیکھا جائے تو یہ ایک پلیٹ کے مشابہ ہوتے ہیں اس کو ٹیسٹ کرنے کے لئے دو طریقے ہیں ایک طریقہ خون ٹیسٹ ہے دوسرا ٹیست ہڈیوں میں موجودگودے کے ذریعے کیا جا تا ہے ایک مائکرولیٹر خون میں تقریبََا 150000(ایک لاکھ پچاس ہزار)سے 4500000 (چار لاکھ ہزار)تک پلیٹ لیٹ سیلسز پائے جاتے ہیں اگر ان کی تعداد 10000 سے 20000 تک گرجائے تو تو خون رسنے کا خطرہ بہت بڑھ جاتا ہے اور یہ تعداد 50000(پچاس ہزار)  سے کم ہو جانے کی صورت میں اگر معمولی سےکٹ یا خراش لگ جائے تو خون کافی مقدار میں ضائع ہو سکتا ہے کچھ لوگوں کے جسم میں پلیٹلیس سیلز بننے کا عمل قدرتی طور پر بہت ذیادہ ہوتا ہے ان کا جسم 500000 (پانچھ لاکھ) سے 1000000 (دس لاکھ) تک پلیٹ لیٹس پیدا کرتا ہے۔

تھرمبوسائیٹوپینیا

 پلیٹ لیٹس کی کمی پیشی کی وجہ سے جو بیماریاب پیدا ہو سکتی ہیں ان میں ایک تھرمبوسائیٹوپینیا   ہے اس بیماری کی صورت میں  ہڈی کا گودا نہایت کم تعداد میں پلیٹ لیٹس بناتا ہے یا پلیٹ لیٹس خود بخود تباہ ہونا شروع ہو جاتے ہیں اگر انکی تعداد نہایت کم ہو جائے تو جسم کے اندورونی یا بیرونی حصہ میں سے خون رسنا شروع ہو جاتا ہے اور اکثر اوقات ناک سے خون نکلنا(نکسیر) شروع ہو جاتا ہے ۔کینسر،جگر کے امراض ،دوران حمل ،انفیکش ،غیر متوازن مدافعتی نظام اور چند خصوص ادویات کے استعمال کی وجہ سے تھرمبوسائیٹوپینیا ہو سکتی ہے

ایسینشل تھرمبو سایئتھیمیا 

اس بیماری میں اپ کے جسم میں پلیٹ لیٹس کی مقدار بڑھ جاتی ہے اس بیماری کے حامل افراد میں پلیٹ لیس کی تعداد 1000000 (دس لاکھ) سے بھی بڑھ جاتی ہے جس کی وجہ  سے  دل اور دماغ کی طرف جانے والا خون لوتھڑا بن کے جم جاتا ہےاور خون کی ترسیل رک جاتی ہے۔ ڈاکٹرز اس بیماری کی وجوہات کے بارے ابھی تک لاعلم ہیں

دیگر بیمیاریوں میں سیکنڈری تھرمبوسائیٹوسز ،پلیٹ لیٹ ڈائی فنکشن شامل ہیں

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں